قسم الحديث (القائل): مرفوع ، اتصال السند: متصل ، قسم الحديث: قولی

سنن ابن ماجه: كِتَابُ الطَّهَارَةِ وَسُنَنِهَا (بَابُ لَا وُضُوءَ إِلَّا مِنْ حَدَثٍ)

حکم : صحیح 

514. حَدَّثَنَا أَبُو كُرَيْبٍ حَدَّثَنَا الْمُحَارِبِيُّ عَنْ مَعْمَرِ بْنِ رَاشِدٍ عَنْ الزُّهْرِيِّ أَنْبَأَنَا سَعِيدُ بْنُ الْمُسَيَّبِ عَنْ أَبِي سَعِيدٍ الْخُدْرِيِّ قَالَ سُئِلَ النَّبِيُّ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ عَنْ التَّشَبُّهِ فِي الصَّلَاةِ فَقَالَ لَا يَنْصَرِفْ حَتَّى يَسْمَعَ صَوْتًا أَوْ يَجِدَ رِيحًا

سنن ابن ماجہ:

کتاب: طہارت کے مسائل اور اس کی سنتیں

(باب: حدث کے بغیر وضو کرنا ضروری نہیں)

تمہید کتاب

مترجم:

514. سیدنا ابو سعید خدری ؓ سے روایت ہے نبی ﷺ سے نماز میں ( وضو ٹوٹنےکا) شبہ پیدا ہونے کےبارے میں سوال کیا گیا تو آپ ﷺ نے فرمایا: ’’نماز چھوڑ کر نہ جائے حتی کہ آواز سنے یا بو محسوس کرے۔‘‘